پہلے دن کہا تھا، ایک وقت آئے گا جب تمام کرپٹ اکٹھے ہوجائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان

اسلام آباد: (انمول نیوز) عمران خان نے ماضی کی حکومتوں کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ پہلے دن کہا تھا، ایک وقت آئے گا جب تمام کرپٹ اکٹھے ہوجائیں گے، وزیراعظم بنتے ہی ایک پیش گوئی کی تھی، سب نے مل کر ملک لوٹا، 4سال میں قرضہ 6سے30ہزار ارب پر پہنچا دیا۔

انہوں نے بتایا کہ جتنا ٹیکس ہم نے اکٹھا کیا آدھا قرضوں کی قسطوں میں چلا گیا، ہمارے ہاں طاقتور کے لیے وی آئی پی سسٹم ہے۔ سوئزرلینڈ، سنگاپور، یورپ دیکھ لیں سب ہم سے آگے ہیں، خوشحال ممالک میں قانون سب کیلئے ایک ہے، سب کوپتہ تھا کہ یہ ملک کو کنگال کرکے گئے ہیں۔

عمران خان کا آزادی مارچ پر ردعمل

وزیراعظم نے مولانا کے آزادی مارچ کو بھی آڑے ہاتھوں لیا، ان کا کہنا تھا کہ مارچ والے کس وجہ پر وزیراعظم کااستعفیٰ لینے آرہے ہیں؟ آزادی مارچ کرنے والوں کا مقصد یہ نہیں کہ حکومت فیل ہورہی ہے، بلکہ یہ ان کا خوف ہے کہ حکومت کامیاب ہورہی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ چوروں نے کرنٹ اکاؤنٹ ڈیفیسٹ میں خسارہ، ریلوے اور پی آئی اے کا دیوالیہ نکال دیا، پہلے دن سے شور مچانا شروع کردیا کہ حکومت فیل ہوگئی جبکہ اے ڈی بی اور آئی ایم ایف سمیت سب کہہ رہے ہیں معیشت مستحکم ہوگئی ہے۔