بھارت کی کشمیرکی مخدوش صورتحال سے عالمی توجہ ہٹانے کی کوشش ناکام ہوگئی ہے۔ڈی جی آئی ایس پی آر

اسلام آباد (انمول نیوز) پاک فوج کےترجمان میجرجنرل آصف غفورنےکہاہےکہ بھارت کا ایک اور جھوٹ بے نقاب ہوگیا۔ بھارت کی کشمیرکی مخدوش صورتحال سے عالمی توجہ ہٹانے کی کوشش ناکام ہوگئی ہے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر)کاکہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں میڈیا کیلئےبلیک آؤٹ ہےجبکہ آزاد کشمیرغیر ملکی میڈیا کیلئے قابل رسائی ہے۔

ترجمان آئی ایس پی آرکاکہناتھاکہ اقوام متحدہ کا فوجی مبصر گروپ آزاد کشمیر میں کہیں بھی جاسکتا ہے، کیا بھارت کے زیر تسلط کشمیر میں ایسا ممکن ہے؟


ڈی جی آئی ایس پی آرنےمزید کہاکہ کسی بھی بھارتی مہم جوئی پر پاکستان کاجواب 27فروری سے زیادہ سخت ہوگا۔ ہزاروں بھارتی فوجی بہادر کشمیریوں کی جدوجہددبانے میں ناکام رہےہیں۔

ڈی جی آئی ایس پی آرکاکہناتھاکہ بھارت کی تازہ کوششیں بھی ناکامی سےدوچارہوں گی۔

واضح رہے کہ بھارتی سرکارکی جانب سے 4 روز قبل صدارتی حکم نامہ جاری کیاگیا ہےجس میں کشمیرکے خصوصی اختیارات سے متعلق آرٹیکل 370 کوختم کردیاگیاہے۔ بھارت کاایجنڈا یہ ہے کہ کشمیر کی مسلمان اکثریت اقلیت میں بدل دی جائے۔ بھارتی راجیہ سبھا کی جانب سے کشمیر کے خصوصی اختیارات کوسلب کرنے والا آرٹیکل 370 بھارتی راجیہ سبھا سے منظور کیاگیاہے۔

مقبوضہ کشمیرکی عوام اور پاکستان کی جانب سے آرٹیکل 370کو یکسرمسترد کردیاگیا۔ پاکستان نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل سےواقعے کاازسرنونوٹس لینے کا مطالبہ کرتے ہوئے موقف اختیار کیا ہے کہ بھارت کشمیر میں جبری طور پرغاصب ہے اور وہاں موجود مسلمانوں کی نسل کشی کررہاہے۔

پاکستان کی جانب سے بھارت کےکشمیرمیں قتل وغارت گری کے واقعات کو بھی اجاگرکیاگیاہے۔ پاکستان نے کہا ہے کہ کشمیر میں پہلے گنزکااستعمال کرکے سینکڑوں کشمیریوں کوزخمی کیاگیا اور اب کلسٹر بموں کااستعمال کرکے بھارت عالمی دہشت گرد ہونے کا ثبوت دے رہاہے۔